Cloud Front
PCB

پاکستان کرکٹ بورڈ قارون کا خزانہ سمجھ کر رقم لٹانے لگا

2 برس میں گورننگ بورڈ ممبرز کے غیرملکی دوروں پر 71 لاکھ سے زائد روپے خرچ ہونے کا انکشاف

کراچی: پاکستان کرکٹ بورڈ بورڈ قارون کا خزانہ سمجھ کر رقم لٹانے لگا،گذشتہ 2 برس میں گورننگ بورڈ ممبرز کے غیرملکی دوروں پر 71 لاکھ سے زائد روپے خرچ ہونے کا انکشاف ہوا ہے۔ میڈیا رپورٹ کے مطابق پی سی بی کی جانب سے وفاقی وزارت بین الصوبائی رابطہ امور کو ارسال کردہ دستاویز کے مطابق 4گورننگ بورڈ ارکان کو ورلڈکپ کیلیے آسٹریلیا نیوزی لینڈ بھیجنے پر53 لاکھ 26 ہزار546 روپے خرچ ہوئے، دلچسپ بات یہ ہے کہ ایک رکن نے دورہ کرنے سے معذرت کرتے ہوئے رقم واپس کر دی پھر بھی ان کے نام پر 475252 روپے کے اخراجات درج ہیں۔

تین ارکان کو انگلینڈ سے سیریز اور پی ایس ایل کے میچز دیکھنے کیلیے یو اے ای بھیجنے پر 17 لاکھ 90 ہزار171 روپے صرف ہوئے۔ وفاقی وزارت بین الصوبائی رابطہ امور نے پی سی بی سے چند روز قبل آفیشلز کے تین سال میں غیرملکی دوروں کی تفصیل طلب کی تھی جو گذشتہ دنوں ارسال کر دی گئی، وزارت کے ذرائع سے اس کی ایک کاپی نمائندہ ’’ایکسپریس‘‘ کو بھی موصول ہوئی ہے،اس میں گورننگ بورڈ ارکان منصور مسعود خان، اعجاز احمد فاروقی، یوسف نعیم کھوکھر اور سیکریٹری آئی پی سی محمد اعجاز چوہدری کو 2015 میں ورلڈکپ کیلیے آسٹریلیا و نیوزی لینڈ بھیجنے کا ذکر ہے۔دورۂ آسٹریلیا میں منصور خان پر13 لاکھ 72 ہزار 640 روپے خرچ ہوئے،اس میں 389098 ڈیلی الاؤنس اور983542 سفر کے تھے،اعجاز چوہدری پر 17 لاکھ 30 ہزار 484 روپے صرف کیے گئے،اس میں 584820ڈیلی الاؤنس و رہائش جبکہ 1145664سفر کے تھے، یوسف نعیم کھوکھر پر17 لاکھ 48 ہزار 170 روپے کے اخراجات آئے، اس میں 584820ڈیلی الاؤنس اور1163350 سفری تھے۔