Cloud Front
tariq-fatemi

پاکستان خطے میں قیام امن کیلئے قدم بڑھانے کیلئے تیار ہے ، طارق فاطمی

پاکستان نے بھارت کیلئے ہمیشہ مذاکرات کا دروازہ کھلا رکھا ہے،کشمیریوں کی جدوجہد ان کی اپنی تحریک ہے لیکن بھارت انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں کا مرتکب ہو رہا ہے
نوازشریف کے دور حکومت میں پاک امریکا تعلقات مستحکم ہوئے ہیں ،ڈونلڈ ٹرمپ کے صدر بننے کے بعد پاک امریکہ تعلقات میں مزید بہتری آئے گی ،صحافیوں سے گفتگو

واشنگٹن: وزیراعظم کے معاون خصوصی طارق فاطمی نے کہا ہے کہ خطے میں امن کیلئے پاکستان قدم بڑھانے کیلئے تیار ہے، پاک بھارت تعلقات میں پاکستان نے ہمیشہ مذاکرات کا دروازہ کھلا رکھا ہے،کشمیریوں کی جدوجہد ان کی اپنی تحریک ہے لیکن بھارت مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں کا مرتکب ہو رہا ہے،وزیرا عظم نوازشریف کے دور حکومت میں پاک امریکا تعلقات مستحکم ہوئے ہیں ،ڈونلڈ ٹرمپ کے صدر بننے کے بعد پاک امریکہ تعلقات میں مزید بہتری آئے گی ۔واشنگٹن میں صحافیوں سے گفتگو میں وزیراعظم کے معاون خصوصی طارق فاطمی نے کہا کہ افغانستان میں قیام امن اور پاک بھارت تعلقات میں بہتری کے لیے نئی امریکی حکومت سے تعاون پر تیار ہیں، ڈونلڈ ٹرمپ کے صدر بننے کے بعد پاک امریکا تعلقات میں مزید بہتری آئے گی،

پاکستان اور امریکا سات دہائیوں سے دنیا بھر میں امن و امان کے لیے تعاون کرتے آئے ہیں لہذا امید ہے کہ ٹرمپ کے صدر بننے کے بعد دونوں ملکوں میں بامعنی تعاون فروغ پائے گا۔ ۔انہوں نے کہاکہ ملک سے دہشتگردی کے خاتمے کے لئے پاکستان پر عزم ہے اور دہشتگردی کے خلاف جنگ کامیابی سے جاری ہے۔ان کا کہنا تھا کہ کشمیریوں کی جدوجہد ان کی اپنی تحریک ہے لیکن بھارت مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں کا مرتکب ہو رہا ہے اور معصوم شہریوں کو نشانہ بنایاجارہا ہے۔ شہریوں پر حملہ توجنگ میں بھی نہیں کیا جاتا ۔طارق فاطمی نے کہا کہ پاکستان نیشنل ایکشن پلان پر عمل کر رہا ہے اور ساری قوم دہشت گردی کے خاتمے کے لئے متحد ہے جب کہ پاکستان کے 5 ہزار سے زائد فوجی شہید ہوئے ہیں اور اس وقت دو لاکھ فوجی شمالی علاقوں اور پاک افغان سرحد پر تعینات ہیں۔وزیراعظم کے معاون خصوصی طارق فاطمی نے امریکی نائب وزیرخارجہ انٹونی بلنکن سے بھی ملاقات کی۔