Cloud Front
Aitzaz Ahsan

پی آئی اے طیارہ حادثے سے متعلق انکوائری کمیشن بناناچاہئے، اعتزاز احسن

نیوزگیٹ سکینڈل میں فرینڈلی کمیشن بنایاگیا، معاملہ ایک دن میں حل ہوسکتاتھا،شریف فیملی لندن فلیٹ تسلیم کرچکی ،شریف برادران کاکاروبارپرچوں پرمنحصرتھا،اس لئے کیس ہارچکے ہیں،رہنما پیپلز پارٹی

اسلام آباد: پاکستان پیپلزپارٹی کے سینئرایڈووکیٹ اعتزازحسن نے کہاکہ پی آئی اے طیارہ حادثے سے متعلق انکوائری کمیشن بناناچاہئے ،نیوزگیٹ سکینڈل میں فرینڈلی کمیشن بنایاگیاتاہم یہ معاملہ ایک دن میں حل ہوسکتاتھا،شریف فیملی لندن فلیٹ تسلیم کرچکی ہے ،ابھی انہیں عدالت میں ثابت کرناہوگا،شریف برادران کاکاروبارپرچوں پرمنحصرتھا،اس لئے کیس ہارچکے ہیں ،وزیراعظم کی کیس میں بریت بہت مشکل ہے ۔نجی ٹی وی پروگرام میں گفتگوکرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ مجھے حیرت اس بات پرہے کہ وزیراعظم نے پارلیمنٹ کے فلوراپنے دوبارخطاب میں کہاتھاکہ میرے ساتھ تمام دستاویزات ہیں اگردستاویزات ہیں توعدالت کے سامنے پیش کریں۔

انہیں عدالت کویہ بھی ثبوت پیش کرناہوں گے کہ رقم کہاں سے آئی اورکیسے گئی یہ 8ارب روپے کی جائیدادہے،ہاتھی کوکمرے میں چھپایانہیں جاسکتا۔ انہوں نے کہاکہ جس طرح اٹارنی جنرل نے عدالت کوبتایاکہ شریف خاندان کاکاروبارپرچیوں پرتھاکوئی ثبوت نہیں ہے تواس لئے وہ کیس ہارچکے ہیں یہ ججزکیلئے بہت سادہ کیس ہے اورکیس اب بہت سادہ ہوچکاہے،اگلے تین دنوں میں کیس سنایا جائیگا پانامہ کیس معاملے کی انکوائری کیلئے کمیشن کی ضرورت نہیں، کمیشن سے فوری انصاف نہیں ملے جائیگا۔ انہوں نے کہاکہ پی آئی اے طیارہ حادثہ سے متعلق انکوائری کمیشن بناناچاہئے،غفلت نہ ہوتی توحادثہ پیش نہ آتا۔انہوں نے کہاکہ تحریک انصاف کوپانامہ کیس سے متعلق مشورے دیئے تھے جبکہ انہوں نے مجھے شامل ہونے کیلئے نہیں کہا۔