Cloud Front

اے بی ڈی ولیئرز نے جنوبی افریقہ کی ٹیسٹ ٹیم کی کپتانی سے استعفیٰ دے دیا

مجھ سمیت کسی کے بھی ذاتی مفاد سے ذیادہ ہمیشہ ٹیم کا مفاد مقدم ہونا چاہیے، اے بی ڈویلیئرز

جوہانسبرگ : اے بی ڈی ولیئرز نے جنوبی افریقہ کی ٹیسٹ ٹیم کی کپتانی سے استعفیٰ دے دیا جبکہ بورڈ نے فیف ڈوپلیسی کو مستقل کپتان مقرر کرنے کی تصدیق کردی ہے۔جنوبی افریقہ کرکٹ بورڈ کی جانب سے جاری ایک اعلامیہ میں کہا گیا ہے کہ اے بی ڈی ولیئرز نے جنوبی افریقہ کی ٹیسٹ ٹیم کی قیادت سے فوری طور پر مستعفی ہونے کا فیصلہ کیا ہے۔

ڈی ولیئرز کو رواں سال جنوری میں ہاشم آملہ کی جانب سے استعفے کے بعد ٹیسٹ ٹیم کا کپتان مقرر کیا گیا تھا جس کے بعد ان کی قیادت میں ٹیم نے انگلینڈ کے خلاف دو ٹیسٹ میچ کھیلے تھے تاہم انجری کے باعث نیوزی لینڈ اور آسٹریلیا کے خلاف منعقدہ سیریز میں ٹیم کا حصہ نہیں تھے۔اے بی ڈی ولیئرز نے کپتانی سے کنارہ کشی کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ ‘مجھ سمیت کسی کے بھی ذاتی مفاد سے ذیادہ ہمیشہ ٹیم کا مفاد مقدم ہونا چاہیے،

یہ میرے لیے بڑے اعزاز کی بات تھی کہ مجھے ٹیسٹ ٹیم کی قیادت کرنے کو کہا گیا لیکن میں دو سیریز میں شرکت نہیں کرسکا اور اب سری لنکا کے خلاف سیریز میں بھی شبہات ہیں’۔ان کا کہنا تھا کہ ‘آسٹریلیا میں ٹیم کی غیرمعمولی کارکردگی کے بعد ٹیم کے مفاد میں یہ واضح ہوا ہے کہ فیف ڈوپلیسی کو ٹیسٹ ٹیم کا مستقل کپتان مقرر کرنا چاہیے’۔فیف ڈوپلیسی کے ساتھ تعلق کے حوالے سے ان کا کہنا تھا کہ ‘میں فیف ڈوپلیسی کو تقریباً20 برسوں سے جانتا ہوں یہاں تک کہ ہم نے ایک ہی اسکول میں کھیلا اور اگر انھیں ٹیسٹ ٹیم کی قیادت کے لیے کہا گیا تو میری حمایت ان کے ساتھ ہوگی.