Cloud Front
PIA

پی آئی اے : لاہور سے کولمبو جانے والے جہاز کے ہائیڈرولک پائپ پھٹ گئے

’’کالے بکرے کا صدقہ کام آگیا‘‘ پی آئی اے کی پرواز بال بال بچ گئی
لاہور سے کولمبو جانے والے جہاز کے ہائیڈرولک پائپ پھٹ گئے جس کے باعث ایمرجنسی لینڈنگ کروائی گئی، پرواز میں180مسافر سوار تھے،میڈیا رپورٹس

کراچی: ’’ کالے بکرے کا صدقہ کام آگیا‘‘پی آئی اے کی لاہور سے کولمبو جانے والی پرواز حادثے کا شکار ہونے سے بال بال بچ گئی،پرواز میں 180مسافر سوار تھے۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق پی آئی اے کی پروازپی کے 898لاہور سے کولمبو کے لیے روانہ ہوئی تو دوران پرواز جہاز کے ہائیڈرولک پائپ پھٹ گئے جس کے باعث پرواز کی کراچی ائیر پورٹ پر ایمرجنسی لینڈنگ کر ائی گئی

جہاز کو کراچی ائیر پورٹ اتارتے وقت ایمر جنسی کا اعلان بھی کیا گیا تھا ۔پی آئی اے کے مسافر طیارے پی کے 898میں 180مسافر سوار تھے ۔ذرائع کے مطابق جہاز صبح 4بجے کراچی ائیر پورٹ پر اترا اورمرمت کے بعد 6بجکر 39منٹ پر کولمبو کے لیے روانہ ہو گیا ۔یاد رہے کہ18دسمبر کو پی آئی اے نے جدید ٹیکنالوجی کے استعمال کے بجائے نیا طریقہ ایجاد کیا تھا اور طیاروں کی پرواز محفوظ بنانے کے لیے کالے بکروں کا صدقہ دینا شروع کردیا ہے۔ اسلام آباد سے ملتان جانے والی پرواز سے پہلے کالے بکرے کا صدقہ دیا گیا جس کا مقصد یہ تھا کہ جہاز اپنی منزل پر خیر وعافیت سے پہنچ جائے۔واضح رہے کہ چند روز قبل چترال سے اسلام آباد جانے والی پی آئی اے کی پرواز ایبٹ آباد میں حویلیاں کے قریب گر کر تباہ ہوگئی تھی جس کے نتیجے میں معروف نعت خواں جنید جمشید، ان کی اہلیہ، ڈپٹی کمشنر چترال، ان کی اہلیہ، بیٹی اور3 غیرملکیوں سمیت 47 افراد جاں بحق ہوئے۔