Cloud Front
alastar cook

بھارت سے 4-0سے شکست ،ایلسٹر کک نے عہدہ چھوڑنے کا عندیہ دیدیا

ایلسٹر کک کی باڈی لینگویج ایسی تھی جس سے لگا وہ قیادت چھوڑنے کے بارے میں سوچ رہے ہیں، مائیکل وان
جیفری بائیکاٹ نے بھی کک کو قیادت چھوڑنے کا مشورہ دیدیا

میلبورن: انگلینڈ کے سابق کپتان مائیکل وان نے امید ظاہر کی ہے کہ بھارت کے خلاف 4۔0 سے شکست کے بعد ٹیم کے موجودہ کپتان ایلسٹر کک اپنا عہدہ چھوڑ دیں گے۔ایلسٹر کک نے بھی بھی شکست کے بعد عہدہ چھوڑنے کا عندیہ دیا ہے کہا کہ وہ گھر جا کر اپنے مستقبل کے بارے میں سوچیں گے۔مائیکل وان نے ٹیسٹ سیریز میں شکست مایوسی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ گزشتہ تین میچوں میں ایلسٹر کک کی باڈی لینگویج ایسی تھی جس سے لگا کہ وہ قیادت چھوڑنے کے بارے میں سوچ رہے ہیں، وہ ابھی اس بارے میں گومگو کیفیت کا شکار ہیں اور درست فیصلہ کرنے کیلئے وقت لے رہے ہیں۔

42 سالہ سابق کرکٹر نے کہا کہ کک ذپنی طور پر بہت مضبوط ہیں اور اپنے دور قیادت میں اس سے پہلے بھی دو سے تین بار اس دور سے گزر چکے ہیں لیکن کامیابی سے اس سے نکلنے میں کامیاب رہے۔تاہم ساتھ ساتھ انہوں نے انگلش کپتان کو مشورہ دیا کہ وہ خود سے سچ بولیں اور اس بات کا جائزہ لیں کہ کیا ان میں آئندہ گرمیوں کے موسم اور پھر ایشز سیریز میں انگلینڈ کی قیادت کرنے کی لگن اور توانائی موجود ہے۔’اگر اس کا جواب ایک فیصد بھی نہیں میں ہے تو پھر اہیں قیادت سے الگ ہو جانا چاہیے’۔انہوں نے اپنی مثال دیتے ہوئے کہا کہ اپنی قیادت کے دور کے اختتام پر میں کھیل سے لطف اندوز نہیں ہو رہا تھا۔ میں ان کے چہرے سے بھی اس بات کا اندازہ لگا سکتا ہوں کہ وہ کھیل سے لطف اندوز نہیں ہو رہے۔مائیکل وان نے روٹ کو ورلڈ کلس بلے باز قرار دیتے ہوئے کہا کہ وہ ایک بہترین قائد ثابت ہوں گے۔ادھر مایہ ناز سابق انگلش بلے باز جیفری بائیکاٹ نے بھی کک کو قیادت چھوڑنے کا مشورہ دیا ہے تاکہ روٹ کپتان کی حیثیت سے چیزیں سمجھ سکیں اور کھلاڑی بھی ایشز سے قبل ان کا اندازہ قیادت سمجھ سکیں۔