Cloud Front
khursheed-shah

حکومت کے سینئر وزیر ہی وزیراعظم پر اعتماد نہیں کرتے ، سید خورشید شاہ

پیپلزپارٹی کے4مطالبات عوام کے مطالبات ہیں،ہم ایسا کچھ نہیں کریں گے جس سے نظام ڈی ریل ہو، قائد حزب اختلاف

سکھر: قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف سید خورشید شاہ نے کہا ہے کہ حکومت کے سینئر وزیر ہی وزیراعظم پر اعتماد نہیں کرتے لگتا ہے وزیراعظم وزیرداخلہ سے ڈرتے ہیں،پیپلزپارٹی کے4مطالبات عوام کے مطالبات ہیں،ہم ایسا کچھ نہیں کریں گے جس سے نظام ڈی ریل ہو۔سکھر میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے خورشید شاہ نے کہا کہ کابینہ کا سینئر وزیر کہتا ہے کہ نیب کا چےئرمین سپریم کورٹ لگائے جب پارٹی کے وزیر ہی وزیراعظم پر اعتماد نہ کریں تو انہیں مستعفی ہوجانا چاہئے لگتا ہے وزیراعظم وزیرداخلہ سے ڈرتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ 4مطالبات پیپلزپارٹی کے نہیں یہ عوام کے مطالبات ہیں،ہم مطالبات کی منظوری کیلئے جدوجہد کریں گے اور ایسا کچھ نہیں کریں گے جس سے نظام ڈی ریل ہو ہم چاہتے ہیں کہ نظام عوام کے ہاتھ میں رہے۔انہوں نے کہا کہ نوازشریف کی کابینہ خاموش ہے۔بلاول بھٹو قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر ہوں گے میں انہیں سپورٹ کروں گا۔ان کا کہنا تھا کہ بلاول بھٹو جنوری سے پنجاب میں جلسے کریں گے،بلاول کو سیاست کا تجربہ ہوگیا اب انہیں پارلیمنٹ میں آنے کی ضرورت ہے،آصف علی زرداری اور بلاول کے پارلیمنٹ میں آنے سے پارلیمان کا قد پڑھے گا اور بلاول کے پارلیمنٹ میں آنے سے انہیں پارلیمانی تجربہ ہوگا۔انہوں نے کہا کہ آئندہ عام انتخابات میں بلاول بھٹو اور بختاور بھی حصہ لیں گے،پیپلزپارٹی کے متعلق غلط افواہیں پھیلائی جارہی ہیں،سیاست میں اتار چڑھاؤ آتا رہتا ہے،بلاول غریب عوام کی امید ہیں،مسلم لیگ(ن) کی کارکردگی عوام کے سامنے ہے