Cloud Front
john carry

صدارتی الیکشن میں روسی حکومت کی اجازت سے مداخلت کی گئی: جان کیری

امریکا کی خارجہ پالیسی کی پہلی ترجیح امریکیوں کو محفوظ رکھنا ہے۔ امریکا آج پہلے سے زیادہ محفوط ہے، داعش کو آئندہ ایک سال کے دوران کچل دیں گے۔پریس بریفنگ

واشنگٹن: امریکی وزیر خارجہ جان کیری نے کہا ہے کہ امریکا کی خارجہ پالیسی کی پہلی ترجیح امریکیوں کو محفوظ رکھنا ہے۔ امریکا آج پہلے سے زیادہ محفوط ہے۔ اوباما انتظامیہ کی خارجہ پالیسی پر پریس بریفنگ دیتے ہوئے صدارتی الیکشن میں ہیکنگ کے معاملے پر ان کا کہنا تھا کہ انٹیلی جنس اداروں کی رپورٹ بالکل درست ہے۔ روسی حکومت کی اجازت سے مداخلت کی گئی تھی۔ ان کا کہنا تھا کہ اسامہ بن لادن کے بیٹے حمزہ بن لادن کو عالمی دہشت گردوں کی فہرست میں شامل کر لیا گیا ہے۔ آڈیو پیغام میں حمزہ بن لادن نے فرانس، اسرائیل، پیرس اور واشنگٹن میں حملوں کی دھمکی دی تھی۔

جان کیری نے کہا ہے کہ شدت پسند تنظیم ’داعش‘ نے انسانی تہذیب کے خلاف جنگ مسلط کر رکھی ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ داعش نے طاقت کے ذریعے مشرق وسطیٰ کا نقشہ تبدیل کرنے کی کوشش کی مگر داعش کو آئندہ ایک سال کے دوران کچل دیں گے۔جان کیری نے کہا کہ داعش پرانے مراکز سے محروم ہو رہی ہے مگر ساتھ ہی تنظیم نئے اڈوں کے قیام کے لیے کوشاں ہے اور زیادہ سے زیادہ حملے کرنا چاہتی ہے۔انہوں نے کہا کہ داعش کے خلاف جنگ کا عالمی پلان کامیاب اور نتیجہ خیز ثابت ہوا ہے۔

انہو ں نے کہا کہ ایران جوہری بم تیار نہیں کر سکتا کیونکہ تہران اپنے 98 فی صد افزودہ یورینیم سے دست بردار ہو چکا ہے۔ جان کیری نے خبردار کیا کہ ایران کے جوہری پروگرام پرطے پائے سمجھوتے سے پیچھے ہٹنا انتہائی خطرناک اقدام ثابت ہو سکتا ہے۔شام میں جاری بحران کے بارے میں پوچھے گئے سوال کے جواب میں جان کیری نے کہا کہ بشارالاسد اور ان کے حلیف دانستہ طور پر بحران کو طول دے رہے ہیں۔ امریکا اب بھی شام کے مسئلے کا فوجی کے بجائے سیاسی حل چاہتا ہے۔