Cloud Front
Salman bin aziz

امریکا اور سعودی عرب ایرانی ایٹمی معاہدے پر سختی سے عمل درآمد کرانے پر متفق

سات مسلم ممالک پر پابندی تمام مسلمانوں پر پابندی نہیں، 90 دن میں محفوظ پالیسیاں بناکر تمام ملکوں کو ویزا جاری کریں گے ، ٹرمپ کی سعودی شاہ سلمان سے ٹیلی فون پر گفتگو

ریاض/ واشنگٹن : امریکا اور سعودی عرب ایرانی ایٹمی معاہدے پر سختی سے عمل کرانے پر متفق ہو گئے ہیں،ڈونلڈٹرمپ نے سعودی شاہ سلمان سے ٹیلی فون پر گفتگو میں یقین دلایا ہے کہ سات مسلم ممالک پر ویزا پابندی تمام مسلمانوں پر پابندی نہیں ہے ، 90 دن میں محفوظ پالیسیاں بناکر تمام ملکوں کو ویزا جاری کریں گے۔ترجمان وائٹ ہاؤس کے مطابق دونوں ملکوں کے درمیان فوجی، معاشی اور دہشت گردی میں تعاون کو مزید فروغ دینے پر تبادلہ خیال کیاگیا، دونوں رہنماؤں کا شام اور یمن میں محفوظ علاقوں کے قیام پر اتفاق کیاگیا۔غیر ملکی میڈیا کے مطابق امریکا اور سعودی عرب نے ایرانی ایٹمی معاہدے پر سختی سے عمل کرانے پر اتفاق کیا ہے۔

یہ اتفاق رائے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ اور سعودی فرمانروا شاہ سلمان کے درمیان ٹیلی فونک رابطے کے دوران کیا گیا۔وائٹ ہاؤس کے مطابق ڈونلڈ ٹرمپ کا سعودی فرمانروا شاہ سلمان سے گفتگو کرتے ہوئے کہنا تھا کہ سات مسلم ملکوں پر ویزا پابندی کا مطلب تمام مسلمانوں پر پابندی نہیں، نوے دن میں محفوظ پالیسیاں مرتب کرنے کے بعد تمام ملکوں کو ویزا جاری کریں گے۔ ترجمان کے مطابق ڈونلڈ ٹرمپ اور سعودی عرب کے فرمانروا شاہ سلمان بن عبدالعزیز کے درمیان تقریباً ایک گھنٹے تک ٹیلی فون پر بات چیت ہوئی۔ بات چیت میں دونوں ملکوں کے درمیان فوجی اور معاشی تعاون بڑھانے کے علاوہ انسداد دہشت گردی میں تعاون کو مزید فروغ دینے کے حوالے سے تبادلہ خیال کیا گیا، جبکہ دونوں رہنماؤں نے شام اور یمن میں محفوظ علاقوں کے قیام پر بھی اتفاق کیا۔