Cloud Front
ICC

آئی سی سی اجلاس : پاکستان کا بھرپور موقف، ٹھوس دلائل، بھارت کلین بولڈ

دبئی: پاکستان کرکٹ بورڈ کے82 سالہ چیئرمین شہریار خان کو عمر رسیدہ قرار دے کر انہیں حساس کرکٹ معاملات میں عام طور پر فرینڈلی اور سافٹ قرار دیا جاتا ہے لیکن دبئی میں انٹرنیشنل کرکٹ کونسل کی میٹنگ میں بورڈ کے سربراہ شہریار خان نے بھارتی کرکٹ بورڈ کو کلین بولڈ کردیا۔ذرائع کا کہنا ہے کہ بھارتی کرکٹ بورڈ کے سابق صدر اور آئی سی سی کے چیئرمین ششانک منوہر نے اجلاس میں دلیری دکھائی اور ان کے غیر جانب دار رویے کی وجہ سے بھارت کو منہ کی کھانا پڑی۔ بھارت میں سری نواسن اور انوراگ ٹھاکر محاذ بناکر ششانک منوہر کے خلاف مہم چلانے کا ارادہ رکھتے ہیں۔تجربہ کار شہریار خان نے پاکستان کا موقف جاندار اور واضح انداز میں پیش کرکے بھارتی بورڈ کی عبوری کمیٹی کو حیران کردیا۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ اجلاس میں سب سے حیران کن تبدیلی بنگلہ دیش کی جانب سے آئی ہے جس نے پاکستان کی حمایت کرکے بھارت کو حیران کردیا۔ شہریار خان میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ پاکستان کرکٹ کو بھارت سے انٹرنیشنل کرکٹ نہ کھیلنے سے نقصان ہورہا ہے۔

اگر بھارت پاکستان کے ساتھ نہیں کھیلتا تو پاکستان کو اس کے نقصان کا ازالہ کرایا جائے ورنہ ہم عدالت میں جائیں گے۔ دو طرفہ سیریز نہ ہونے سے پاکستان کے کھلاڑیوں کو بھی نقصان ہورہا ہے۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ بگ تھری اور عالمی کرکٹ میں بھارت کی دادا گیری ختم کرانے میں ان کا کردار اہم تھا۔بھارت نے اختیارات کم ہوتے ہوئے دیکھ کر اس کی مخالفت کی۔شہریار خان نے بھارت کے خلاف بھرپور ہوم ورک کے ساتھ اپنے سفارتی کیریئر کا نچوڑ پیش کیا۔ انہوں نے آئیسی سی پر واضح کردیا کہ پاکستان ٹیسٹ کھیلنے والا اہم ملک ہے اس کے خلاف ہونے والی کوئی سازش کا میاب نہیں ہوگی۔ اگر کوئی ملک معاہدہ کرکے اس کی پاسداری نہیں کرتا تو ہم قانونی چارہ جوئی کا حق محفوظ رکھتے ہیں۔اجلاس کے اختتام پرانٹرنیشنل کرکٹ کونسل بھارتی مخالفت کے باوجود بگ تھری نظام کو ختم کرنے کی منظوری دیتے ہوئے 2017 کے پہلے اجلاس میں آئی سی سی میں بڑے پیمانے پر آئین اور سرمائے کی تقسیم کے قوانین میں تبدیلی پر اتفاق کیا گیا۔ تین روزہ اجلا س سے قبل شہریار خان نے ایشین کرکٹ کونسل کے اجلا س کے بعد آئی سی سی اجلاس میں بھی بھارتی سورماؤں کو آڑے ہاتھوں لیا۔