Cloud Front
Pervez Musharraf

ججز نظر بندی کیس میں سابق صدر پرویز مشرف کے دائمی وارنٹ گرفتاری جاری

عدالت نے سابق صدر کو اشتہاری قرار دیتے ہوئے کیس کا سامنا کرنے کیلیئے وطن واپسی پر مکمل سیکیورٹی فراہم کرنے کی یقین دہانی کرا دی

اسلام آباد : ججز نظر بندی کیس میں سابق صدر پرویز مشرف کے دائمی وارنٹ گرفتاری جاری، عدالت نے سابق صدر کو اشتہاری قرار دیتے ہوئے کیس کا سامنا کرنے کیلیئے وطن واپسی پر مکمل سیکیورٹی فراہم کرنے کی یقین دہانی کرا دی۔ تفصیلات کے مطابق اسلام آباد کی انسداد دہشتگردی کی خصوصی عدالت نے ججز نظر بندی کیس میں سابق صدر پرویز مشرف کو اشتہاری قرار دیتے ہوئے انکے دائمی وارنٹ گرفتاری جاری کردیے، عدالت نے کیس کا سامنا کرنے کیلیئے مشرف کی وطن واپسی پر انہیں مکمل سیکیورٹی فراہم کرنے کی یقین دہانی بھی کرا دی۔ ججز نظر بندی کیس کی سماعت انسداد دہشتگردی کی خصوصی عدالت کے جج سہیل اکرام نے کی

سماعت کے دوران پرویز مشرف کے وکیل اختر شاہ ایڈووکیٹ عدالت میں پیش ہوئے۔ اختر شاہ ایڈووکیٹ نے عدالت میں دلائل دیتے ہوئے کہا کہ پرویز مشرف کوسیکیورٹی خدشات ہیں، وزارت داخلہ کی جانب سے فول پروف سیکیورٹی فراہم کرنے کی یقین دہانی نہیں کرائی گئی ، ان کو سکیورٹی فراہم کی جائے۔ اس پر فاضل جج نے جج کے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ پرویز مشرف پاکستان تو آئیں، جس جگہ وہ کہیں گے ان کو اسی جگہ سیکیورٹی فراہم کر دیں گے۔ مشرف کے دکیل نے کہا کہ عدالت حکم دے کہ جب وہ پاکستان پہنچیں تو عین اسی وقت ان کو سکیورٹی فراہم کی جائے گی، جس پر فاضل جج نے ریمارکس دیے کہ آپ عدالت کو پرویز مشرف کے پاکستان آنے کاکوئی ثبوت فراہم کریں،ٹکٹ کی فوٹو کاپی دکھائیں تو عدالت وزارت داخلہ کو سکیورٹی فراہم کرنے کا حکم جاری کر دے گی۔ فاضل جج نے عدالتی احکامات میں سابق صدر مشرف کو اشتہاری قرار دیتے ہوئے انکے خلاف دائمی وارنٹ گرفتاری جاری کردیے اور سیکریٹری داخلہ کو سابق صدر کی وطن واپسی پر انہیں مکمل سیکیورٹی فراہم کرنے کاحکم دیتے ہوئے کیس کی سماعت چودہ مارچ تک ملتوی کردی۔