Cloud Front

سابق وفاقی وزیرحامد سعید کاظمی کی اپیل کا معاملہ اسلام آباد ہائیکورٹ کوبھجوا دیا گیا

سپریم کورٹ کی دوہفتوں میں اپیل پر فیصلہ کرنے کی ہدایت

اسلام آباد : سپریم کورٹ نے سابق وفاقی وزیرحامد سعید کاظمی کی اپیل کا معاملہ اسلام آباد ہائیکورٹ کوبھجواتے ہوئے دوہفتوں میں اپیل پر فیصلہ کرنے کی ہدایت کردی ہے، عدالت عظمیٰ نے اپنے حکم میں کہا ہے کہ مقررہ مدت میں فیصلہ نہ ہواتوملزم ضمانت کا حقدارہوگا، اوراگر ملزم کے وکیل نے التوا لیاتودوہفتے کی مدت کا اطلاق نہیں ہوگا،جبکہ جسٹس امیر ہانی مسلم نے دوران سماعت ریمارکس دیئے کہ اس سے بڑی زیادتی اورکیا ہوگی کہ 4سال سے اپیل سماعت کیلئے مقررنہیں ہوئی، پیر کو کیس کی سماعت جسٹس امیر ہانی مسلم کی سربراہی میں دو رکنی بنچ نے کی،

مقدمہ کی سماعت شروع ہوئی تو پراسیکیوٹر ایف آئی اے نے دلائل دیتے ہوئے موقف اختیار کیا کہ حامد سعید کاظمی سنگین جرم کے مرتکب ہوئے ہیں ان کے دورمیں حجاج کولوٹاگیاجبکہ حامد سعید کاظمی کے وکیل سردار لطیف کھوسہ نے موقف اختیار کیا کہ حامد سعید کاظمی کو سزاغفلت برتنے پر ہوئی ہے ان کا قصور صرف وفاقی وزیرہونا ہے، اس کیس کے دوشریک ملزمان کی ضمانتیں ہوچکی ہیں، فریقین کو سننے کے بعد عدالت عظمیٰ نے معاملہ ہائی کورٹ کو بجھوا کر کیس کا فیصلہ دو ہفتوں میں کرنے کی ہدایت کردی ہے۔