Cloud Front

شریف فیملی کی تین شوگر ملز کی بندش ، کیس کی سماعت 16فروری کی بجائے کل سے ہوگی!

شریف فیملی کی تین شوگر ملز کی بندش
سپریم کورٹ نے لاہور ہائیکورٹ کو بھیجے جانے والے کیس کی سماعت 16 کی بجائے کل سے شروع کرنے کے احکامات جاری کردیئے

رحیم یار خان: سپریم کورٹ آف پاکستان نے شریف فیملی کی تین شوگر ملز کی بندش بارے لاہور ہائیکورٹ کو بھیجے جانے والے کیس کی سماعت 16 فروری کی بجائے کل (14 فروری ) سے شروع کرنے کے احکامات جاری کر کے اس کیس کی سماعت 18 فروری تک مکمل کرنے کے احکامات بھی جاری کر دیے ۔ذرائع کے مطابق سپریم کورٹ کی جانب سے 9 فروری کو سنائے جانے والے فیصلے میں یہ بھی کہا گیا تھا کہ تینوں شوگر ملز 12 فروری تک آپریشنل رہ سکتی ہیں تاکہ ملز کے اندر اور باہر موجود ٹرالیوں پر لوڈ گنے کی کرشنگ مکمل کی جا سکے جس کے باعث چوہدری شوگر ملز رحیم یار خان میں پیداواری عمل 12 فروری کی صبح بند کیا گیا تھا۔

یاد رہے کہ جے ڈی ڈبلیو شوگر ملز کے چیف ایگزیکٹو جہانگیر خان ترین کی اپیل پر سپریم کورٹ آف پاکستان نے شریف فیملی کی رحیم یار خان میں قائم چوہدری شوگر ملز ،بہاولپور میں قائم اتفاق شوگر ملز اور ضلع مظفر گڑھ میں قائم حسیب وقاص شوگر ملز کو فوری طور پر بند کرنے کے احکامات جاری کرتے ہوئے لاہور ہائیکورٹ کو اس کیس کی سماعت 16 فروری سے شروع کر کے ایک ہفتے میں مکمل کرنے کے احکامات جاری کیے تھے تاہم گزشتہ روز سپریم کورٹ آف پاکستان نے اس کیس کی سماعت کل (14 فروری) سے شروع کر کے 18 فروری تک مکمل کرنے کے احکامات جاری کیے ہیں