Cloud Front

شرجیل خان اور خالد لطیف کا مشتبہ شخص سے ملاقات کا اعتراف

شرجیل خان اور خالد لطیف کا مشتبہ شخص سے ملاقات کا اعتراف، فکسنگ میں ملوث ہونے سے انکار

لاہور : پاکستان سپر لیگ(پی ایس ایل) میں مبینہ طور پر سپاٹ فکسنگ میں ملوث قومی کرکٹرز شرجیل خان اور خالد لطیف نے مشکوک شخصیت سے ملنے کا اعتراف کر لیا ہے تاہم سپاٹ فکسنگ میں ملوث ہونے سے صاف انکار کر دیا ہے۔تفصیلات کے مطابق سپاٹ فکسنگ میں مبینہ طور پر ملوث ہونے کے الزام پر پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) نے دونوں کھلاڑیوں کو عبوری طور پر معطل کر کے وطن واپس بھیج دیا تھا اور بعد ازاں انہیں چارج شیٹ بھی دیدی گئی جس کے جواب میں دونوں کھلاڑیوں نے فکسنگ میں ملوث ہونے سے انکار کر دیا ہے۔

ذرائع کے مطابق دونوں کھلاڑیوں نے اپنے جواب میں مشکوک شخص سے ملاقات کا اعتراف کرتے ہوئے کہا ہے کہ ناصر جمشید کے کہنے پر جس شخص نے ان کیساتھ ملاقات کی وہ مداح کی حیثیت سے آیا اور جب فکسنگ کی بات شروع ہوئی تو ہم نے فوراً ملاقات ختم کر دی۔خالد لطیف نے بھی ایسا ہی موقف اختیار کیا ہے کہ وہ قومی ٹیم کے اوپنر ناصر جمشید کے کہنے پر مذکورہ شخص سے ملے تاہم انہیں اور شرجیل دو اس کے بکی ہونے کا علم نہیں تھا۔ دونوں کھلاڑیوں نے کہا ہے کہ جب اس شخص نے فکسنگ کی آفر کی تو ہم اٹھ کر چلے گئے اور اس بات کا اعتراف کرتے ہیں کہ بورڈ حکام کو اس ملاقات کا نہ بتانا غلطی تھی لیکن ہم نے فکسنگ نہیں کی۔