Cloud Front

اسلام آباد، کراچی اورلاہورکے ائیرپورٹس چینی کمپنی کوٹھیکے پردینے کافیصلہ

چائنہ کمپنی کے عہدیداروں نے 9مارچ کوتینوں ائیرپورٹس کامعائنہ کرکے رپورٹ اپنی کمپنی کودیدی
سول ایوی ایشن کا حکومتی اقدام کیخلاف جوائنٹ ایکشن کمیٹی کااجلاس طلب

اسلام آباد: وفاقی حکومت نے اسلام آبادسمیت کراچی اورلاہورکے ائیرپورٹس چائنہ کی ایک کمپنی کوٹھیکے پردینے کافیصلہ کرلیاہے ،چائنہ کمپنی کے عہدیداروں نے 9مارچ کوتینوں ائیرپورٹس کامعائنہ کرکے رپورٹ اپنی کمپنی کودیدی ہے۔سول ایوی ایشن نے حکومت کواس کام سے روکنے کیلئے جوائنٹ ایکشن کمیٹی کااجلاس طلب کرلیاہے ۔تفصیلات کے مطابق حکومت نے ائیرپورٹس کی بہتری کے نام پراسلام آبادانٹرنیشنل ائیرپورٹ ،لاہورانٹرنیشنل ائیرپورٹ اورکراچی انٹرنیشنل ائیروپرٹ آف سورس کرنے کافیصلہ کیاہے اوراس حوالے سے ایک چائنہ کمپنی کویہ ٹھیکہ دیاجارہاہے اوراس کمپنی کے عہدیداروں نے نومارچ کودورہ کرکے رپورٹ بھی اپنی کمپنی دیدی ہے ۔جبکہ حکومت اب اس بارے ٹینڈر25مارچ کواوپن کرنے کاارادہ رکھتی ہے ۔دوسری طرف سول ایوی ایشن نے اس فیصلے کی سخت مذمت کرتے ہوئے کہاکہ ہم کسی بھی صورت ایسانہیں ہونے دیں گے کیونکہ ایساکرنے سے ملکی سیکورٹی داؤپرلگ سکتی ہے ،اس حوالے سے سول ایوی ایشن نے جوائنٹ ایکشن کمیٹی کااجلاس 25مارچ کوطلب کرلیاہے